Home  
    Mayor  
    Deputy Mayor  
    Metropolitan Commissioner  
    Departments  
    KMC Directory  
    Photo Gallery  
    Video Gallery  
       
 
 
       
    Tender Information  
    KMC Function  
    Tenders  
    Grand Auctions  
    Section 144 CR.P.C  
    Notifications  
    KMC Resolution  
       
 
 
       
    Public Notice  
    Information  
    National Holidays  
    Prayer Timings  
    Archive  
       


 
 
 
 
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ صدر ایمپریس مارکیٹ کے اطراف میں بلدیہ عظمیٰ کراچی کے کرایہ داروں کے ساتھ معاہدہ اگر تھا تو ختم کردیا ہے-  
     
  08-Nov-2018  
     
   
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ صدر ایمپریس مارکیٹ کے اطراف میں بلدیہ عظمیٰ کراچی کے کرایہ داروں کے ساتھ معاہدہ اگر تھا تو ختم کردیا ہے تاہم فیصلہ کیا گیا ہے کہ بلدیہ عظمیٰ کراچی کے کرایہ داروں کو کے ایم سی کی دیگر مارکیٹوں میں کاروبار کے لئے جگہ مہیا کی جائے گی، اس کے لئے کمشنر کراچی ایک کمیٹی قائم کریں گے جو ان کے کرایہ داروں کی ساتھ مذاکرات و مشاورت سے طریقہ کار طے کرے گی تاہم سپریم کورٹ کی ہدایت پر صدر کے تمام علاقوں کی طرح ایمپریس مارکیٹ کے اطراف بھی غیرقانونی تعمیرات کو مسمار کیا جارہا ہے اور مارکیٹ کی اصل حالت کو بحال کیا جائے گا ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کو صدر کے مختلف علاقوں کے دورے کے بعد کمشنر کراچی افتخار علی شلوانی، ڈی آئی جی سائوتھ جاوید اوڈھو، میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹر سید سیف الرحمن، پولیس اور ڈسٹرکٹ انتظامیہ کے دیگر افسران کے ہمراہ ایمپریس مارکیٹ کے سامنے میڈیا کے نمائندوں کو بریفنگ دیتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ کے احکامات پر عملدرآمد کرتے ہوئے صدر کے اطراف تمام علاقوں اور ایمپریس مارکیٹ کو مکمل طور پر ہر طرح کے تجاوزات سے صاف کیا جائے گا لہٰذا اگر کوئی یہ سمجھتا ہے کہ کسی طرح اثر رسوخ استعمال کرکے یا احتجاج کی آڑ میں تجاوزات کے صاف کرنے کے عمل کو روکا جائے گا تو اس کی یہ غلط فہمی ہے وہ لوگ جو ایمپریس مارکیٹ کے ساتھ بنی ہوئی دکانوں میں کاروبار کررہے ہیں انہیں چاہئے کہ نقصان سے بچنے کے لئے اپنے سامان کو محفوظ مقام پر منتقل کریں اور دکانیں توڑ نے کے عمل میں رکاوٹ نہ بنیں بلدیہ عظمیٰ کراچی نے اپنی دکانوں کے کرائے وصول کرنے کے حوالے سے تمام معاہدے منسوخ کردیئے ہیں، ہم کسی کو بے روز گار کرنا نہیں چاہتے بلکہ ہماری یہ کوشش ہوگی کہ جو لوگ ایمپریس مارکیٹ سے متصل دکانوں میں کاروبار کررہے ہیں انہیں کے ایم سی کی دیگر مارکیٹوں میں مناسب جگہ فراہم کی جائے تاکہ وہ اپنے کاروبار کو جاری رکھ سکیں، ہم شہر کی رونقوں کو آباد کرنا چاہتے ہیں اور راہگیروں کو فٹ پاتھوں پر چلنے کے لئے ان کا حق دینا چاہتے ہیں،تجاوزات کسی بھی شکل میں ہوں وہ کسی بھی طرح شہر کی خوبصورتی میں اضافہ نہیں کرتے بلکہ تجاوزات کے باعث شہر بے ہنگم نظر آتا ہے، انہوں نے کہا کہ تجاوزات ہٹانے کے حوالے سے سیاسی قیادت سے لے کر کراچی کی انتظامیہ تک سب ایک پیج پر ہیں اور چاہتے ہیں کہ سپریم کورٹ کے احکامات پر من و عن عمل کرایا جائے، انہوں نے کہا کہ جو قانون کو ہاتھ میں لے گا وہ اپنے کئے کا خود ذمہ دار ہوگا، انہوں نے کہا کہ صدر کی فٹ پاتھوں اور ایمپریس مارکیٹ کے اطراف تمام لوگ غیرقانونی قابضین ہیں اب وقت آگیا ہے کہ کراچی کی حدود کی خوبصورتی کو بحال کیا جائے کوئی شخص قانون کو ہاتھ میں لے گا تو قانون حرکت میں آئے گا، بعدازیں اعلیٰ سطحی اجلاس میں بتایا گیا کہ ایمپریس مارکیٹ کے اطراف چار کونے پر غیرقانونی قابضین نے مسافر خانے ، پرس کے کارخانے اور دیگر غیرقانونی کاروبار کیا ہوا ہے اس مہم میں ان سب کو صاف کیا جائے گا، کمشنر کراچی افتخار علی شلوانی نے کہا کہ ہم کراچی کو اس کی اصل صورت میں واپس بحال کرنا چاہتے ہیں وہ کراچی جو ہمارے بزرگوں نے دیکھا تھا ہم کراچی کو وہی صورت دوبارہ دیں گے اور عدالتی حکم پر مکمل طور پر عملدرآمد کرائیں گے، بعدازاں بلدیہ عظمیٰ کراچی کے محکمہ انسداد تجاوزات نے صدر اور دیگر ملحقہ علاقوں میں تجاوزات ہٹائے جانے کا سلسلہ مسلسل چوتھے روز بھی جاری رکھا، اس دوران جمعرات کو زیب النساء اسٹریٹ، شاہراہ عراق، میر کرم اللہ تالپور روڈ، دائود پوتہ روڈ، نیو پریڈی اسٹریٹ، زینب مارکیٹ، عبداللہ ہارون روڈ، راجہ غضنفر علی روڈ، ریگل چوک کے چاروں طرف اور اکبر روڈ کی گلیوں کو بھی تجاوزات سے مکمل طور پر صاف کیا گیا،مذکورہ علاقوں میں آپریشن کے دوران تقریباً 24 غیرقانونی دکانوں / کیبنز اور تقریباً ساڑھے تین ہزار غیرقانونی سن شیڈز ہٹا دیئے گئے جبکہ موبائل مارکیٹ کی گلیوں میں موجود تجاوزات کو بھی ہٹادیا گیا، موبائل مارکیٹ میں بہت بڑے بڑے اور بے ہنگم بورڈز فٹ پاتھوں پر جھکے ہوئے تھے جنہیں بھاری مشینری کے ذریعے ہٹا کر عمارتوں کی اصل صورت کو بحا ل کیا گیا جبکہ فٹ پاتھوں پر موجود تجاوزات کو بھی صاف کردیا گیا، تجاوزات کے خلاف اس آپریشن کی نگرانی بلدیہ عظمیٰ کراچی کے میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹر سید سیف الرحمن کررہے ہیں جنہوں نے جمعرات کے دن بھی اپنی نگرانی میں تجاوزات صاف کرائیں انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ جہاں تجاوزات صاف کئے جارہے ہیں وہاں دوبارہ تجاوزات قائم نہ ہونے پائیں جس کے لئے نگراں کمیٹیاں بھی تشکیل دی جائیں گی اور ساتھ ہی ساتھ کیمپس بھی لگائے جائیں گے۔  
     
     
   
     
     

 

 

 

 

 
 
     
 

Copyright © 2011-2012 Karachi Metropolitan Corporation. All rights reserved.
The KMC will not be responsible for the content of external internet sites. / Login  / Webmail  / Webmail 2  / 1339 Executive Dashboard